تاج محل کے بارے میں پوشیدہ حقائق

  •   0
  •   Afi Sindhu
  •   0
  •   302
جب کبھی بھی محبت کرنے والوں کا ذکر کیا جاتا ہے. تو اس ذکر میں تاج محل کا نام ضرور آتا ہے. تاج محل کو دنیا کے چند حیریت انگیز عجوبوں میں سے ایک عجوبہ مانا جاتا ہے.

جب کبھی بھی محبت کرنے والوں کا ذکر کیا جاتا ہے. تو اس ذکر میں تاج محل کا نام ضرور آتا ہے. تاج محل کو دنیا کے چند حیرت انگیز عجوبوں میں سے ایک عجوبہ مانا جاتا ہے. اور دنیا بھر سے لوگ اسے دیکھنے کے لیے آتے ہیں. ہم جانتے ہیں کہ تاج محل کو محبت کی نشانی کے طور پر جانا جاتا ہے.

taj

مگر تاج محل کی داستان سے بہت کم لوگ واقف ہیں. تاج محل کو دیکھنے کے بعد ذہن میں خیال آتا ہے کہ شاہ جہاں نے ممتاز سے کتنی شدت سے محبت کی ہو گی. شاہ جہاں کا اصل نام خرم تھا. شاہ جہاں نے تاج محل بنانے کے لیے پورا خزانہ ختم کر دیا تھا. پھر اس کے بیٹے نے اسے قید کر کے خود سلطنت سمبھال لی. شاہ جہاں قید میں ہی مر گیا تھا. آئیں شاہ جہاں کی زندگی کے بارے میں کچھ حقائق جانتے ہیں.

mehal

ممتاز شاہ جہاں کی سات بیویوں میں سے چوتھی بیوی تھی. شاہ جہاں نے ممتاز کے شوہر کو اس لیے قتل کر دیا. کہ وہ اس سے شادی کرنا چاہتا تھا. ممتاز کے پہلے شوہر کا نام شیر افغان خان تھا. اور وہ شاہ جہاں کا صوبیدار تھا. شاہ جہاں نے ممتاز کو حرم کر کے اس سے شادی کی تھی. ممتاز اور شیر افغان خان کا ایک بچہ بھی تھا.

tajjj

1631 میں ممتاز 47 سال کی عمر میں انتقال کر گئ تھی. جب ممتاز اپنے چودہویں بچے کو جنم دے رہی تھی. ان کے چودہویں بچے کا نام گوہر بیگم تھا. ممتاز کے انتقال کے بعد شاہ جہاں نے ممتاز کی بہن فرزانہ کے ساتھ شادی کر لی تھی. شاہ جہاں اگر ممتاز سے اتنا پیار کرتا تھا تو اس نے اس کے مرنے کے بعد شادی کیوں کی؟ اور وہ بھی اسی کی بہن کے ساتھ؟

taj mahel

شاہ جہاں نے ممتاز کی یاد میں ایک مقبرہ تعمیر کرنے کا حکم دیا. جس کی شرط یہ تھی کہ ایک ایسا مقبرہ تعمیر کیا جائے. جو اس سے پہلے دنیا میں نا کبھی تعمیر کیا گیا ہو اور نا کبھی دیکھا گیا ہو. تکہ ممتاز اور شاہ جہاں کی محبت کی یادگار ہمیشہ کے لیے تاریخ کا حصہ بن جائے. اس مقبرے کو بنانے کے لیے آگرہ میں دنیا بھر سے سفید خوبصورت ماربل منگوائے گئے تھے. اس کے بعد اس مقبرے کا نام تاج محل رکھ دیا گیا. تاج محل کی آرائش میں کسی قسم کی کمی نہیں چھورئی گئ. یہی وجہ ہے کہ دنیا بھر سے لوگ اس کو دیکھنے کے لیے آتے ہیں.

tah

تاج محل کا ڈیزائن عربی سٹائل کا ہے جس میں مسلم نقش بنائے گئے ہیں. اور قیمتی پتھر بھی جوڑے گئے ہیں. کچھ لوگوں کا کہنا ہے کہ شاہ جہاں اپنا مزار بھی دریا کے دوسری طرف بنوانا چاہتا تھا. جو کہ تاج محل سے زیادہ خوبصورت اور مہنگا تعمیر ہونا تھا. اور جسے کالے ماربل سے تعمیر کیا جانا تھا. مگر اس کا یہ خواب پورا نا ہو سکا. اور آخر کار شاہ جہاں نے مرنے کے بعد تاج محل کے اندر ہی جگہ پائی. اس بات کی 4 صدیاں گزر چوکی ہیں. پر ہر سال تاج محل لاکھوں لوگوں کی اپنی طرف متوجہ کرتا ہے . کہا جاتا ہے کہ شاہ جہاں نے مزدوروں کے ہاتھ کٹوا دیئے تھے تکہ وہ دوبارہ ایسا محل نا تعمیر کر سکے. لیکن ایسی افواہوں کی کوئی تصدیق موجود نہیں ہے.

Taj Mahel

اس بلاگ کے بارے میں اپنی رائے نیچے ضرور دیں.

0 Reviews
Blogs, Vlogs iGreen Bottom Image